کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کا نام بلیک لسٹ میں ڈال دیا گیا

10

اسلام آباد:  وزارت داخلہ نے ایون فیلڈ ریفرنس کے فیصلے کے بعد نیب کی سفارش پر کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کا نام بلیک لسٹ میں ڈال دیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ احتساب عدالت کے ایون فیلڈ ریفرنس میں فیصلے کے بعد نیب نے وزارت داخلہ کو نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کی تھی۔ تاہم وزارت داخلہ نے پہلے مرحلے میں کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کا نام بلیک لسٹ میں شامل کیا ہے، جس کا مقصد انہیں گرفتاری دینے کا ایک موقع فراہم کرنا ہے، اگر وہ گرفتاری نہیں دیتے تو دوسرے مرحلے میں ان کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل کر دیا جائے گا۔

وزارت داخلہ ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کے پہلے سے بیرون ملک ہونے کی وجہ سے ان کے نام ای سی ایل میں نہیں ڈالے گئے۔

 

ادھر قومی احتساب بیورو (نیب) نے سابق وزیرِاعظم میاں نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کو وطن واپسی پر ایئرپورٹ سے گرفتار کرنے کا فیصلہ کر لیا۔ نیب ذرائع کے مطابق نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم کو وطن واپسی پر ایئرپورٹ سے ہی حراست میں لے لیا جائے گا جبکہ کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کو بروز پیر مورخہ 9 جولائی کو گرفتار کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق گرفتاریوں کیلئے تشکیل دی جانے والی نیب لاہور ٹیم کی قیادت عمران ڈوگر کر رہے ہیں۔ نیب ٹیم پیر کے روز اسلام آباد کی احتساب عدالت سے وارنٹ حاصل کرے گی، جس کے بعد کیپٹن صفدر کو خیبر پختونخوا پولیس کے ہمراہ گرفتار کرے گی اور جیل منتقل کرے گی۔

مزید خبریں

اپنی رائے دیجئے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.