سونو نگم کو ایک مرتبہ پھر جان سے مارنے کی دھمکیاں

21

ممبئی: گزشتہ برس اذان کو شور قرار دینے والے بھارتی گلوکار سونو نگم کو ایک مرتبہ پھر جان سے مارنے دھمکیاں ملنے کے بعد سیکیورٹی بڑھادی گئی۔

نامور بھارتی گلوکار سونگم کو نامعلوم افراد کی جانب سے جان سے مارنے کی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مہاراشٹرا انٹیلی جنس ڈیپارٹمنٹ نےممبئی پولیس کو تنبیہ کرتےہوئے کہا ہے کہ سونونگم کی سیکیورٹی بڑھائی جائے کیونکہ ان کی جان کو خطرہ ہے۔ انٹیلی جنس ڈیپارٹمنٹ کے مشیر نے پولیس کو آگاہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سونو نگم چند عناصر کے نشانے پر ہیں اور انہیں عوامی مقامات، کسی تقریب یا تشہیری سرگرمی کے دوران نشانہ بنایا جاسکتا ہے لہٰذا ان کی سیکیورٹی بڑھائی جائے۔

انٹیلی جنس کی ہدایات ملنے کے بعد ممبئی پولیس نے گلوکار کو ناصرف اسپیشل سیکیورٹی فراہم کی ہے بلکہ ان کی حفاظت کو تمام معاملات پر ترجیح دی ہے۔

دوسری جانب بھارتی میڈیا میں یہ افواہیں گردش کررہی ہیں کہ سونو نگم نے گزشتہ برس اذان مخالف ٹوئٹس کرکے مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی تھی ہوسکتا ہے اسی معاملے کی وجہ سے انہیں قتل کرنے کی دھمکیاں دی جارہی ہوں۔

واضح رہے کہ سونونگم نے گزشتہ برس اذان سے متعلق نامناسب ٹویٹ کرتے ہوئے اذان کو شور قرار دیا تھا  اور مساجد میں لاؤڈ اسپیکر پر پابندی لگانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ بھارت میں جبری مذہب پرستی آخر کب ختم ہوگی۔ سونونگم کے ان ٹویٹس نے ناصرف بھارت میں ایک نیا تنازع کھڑا کردیا تھا بلکہ وہ بھارت سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے کے باعث  شدید تنقید کی زد میں بھی آ گئے تھے۔

مزید خبریں

اپنی رائے دیجئے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.