صلاح لگاتار دوسرے سال بہترین افریقی فٹبالر کا ایوارڈ لے اڑے

13

مصر کے فٹبالر محمد صلاح نے عمدہ کارکردگی کی بدولت لگاتار دوسرے سال بہترین افریقی فٹبالر کا ایوارڈ جیتنے کا اعزاز حاصل کر لیا۔

سالانہ ایوارڈز کا ووٹنگ پینل افریقہ کے مختلف ملکوں کے کوچز، کپتانوں، آفیشلز اور صحافیوں پر مشتمل ہوتا ہے جنہوں نے لگاتار دوسرے سال صلاح کو بہترین فٹبالر منتخب کیا۔

اس ایوارڈ کے لیے ان کا مقابلہ لیورپول کے لیے کھیلنے والے سینیگال کے سادیو مانے اور آرسینل کے اسٹرائیکر پیئرے ایمرک اوبے ماینگ سے تھا۔

انگلش پریمیئر لیگ میں لیورپول کی نمائندگی کرنے والے صلاح نے لیگ کے گزشتہ سیزن میں اپنے کلب کے لیے 36 میچوں میں 32 گول اسکور کر کے ریکارڈ بنانے کے ساتھ ساتھ گولڈن بوٹ کا ایوارڈ جیتا تھا۔

ان کی عمدہ کارکردگی کی بدولت لیورپول نے ناصرف انگلش پریمیئر لیگ میں شاندار کھیل پیش کیا تھا بلکہ وہ چیمپیئنز لیگ کے بھی فائنل میں پہنچنے میں کامیاب رہی تھی جہاں اسے ریال میڈرڈ کے ہاتھوں شکست ہوئی تھی۔

صلاح یہ ایوارڈ جیتنے والے دوسرے مصری فٹبالر ہیں اور ان سے قبل 1983 میں محمود الخطیب نے یہ ایوارڈ اپنے نام کیا تھا۔

خواتین میں جنوبی افریقہ کی 22سالہ تھیمبی گٹلانا نے بہترین افریقی فٹبالر کا ایوارڈ جیتنے کا اعزاز حاصل کیا۔

مزید خبریں

اپنی رائے دیجئے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.