Mashriq Newspaper

غیر قانونی اور غیر ملکی باشندوں کو گترفتار کر کے چمن بارڈر منتقل کر دیا جائیگا ، ڈپٹی کمشنر کوئٹہ

کوئٹہ (آن لائن) ڈپٹی کمشنر کوئٹہ لیفٹیننٹ (ر) سعد بن اسد نے کہا ہے کہ غیر قانونی اور غیر ملکی باشندوں کو دی جانے والی ڈیڈ لائن ختم ہونے کے بعد انتظامیہ کی جانب سے مرتب کئے جانے والے اعداد و شمار کے بعد کوئٹہ کے مختلف علاقوں میں پولیس کی جانب سے آپریشن کے دوران 425 سے زائد افغان باشندوں جن میں خواتین، بچے ، بزرگوں اور نوجوانوں کو حراست میں لیکر بنائے جانے والے ہولڈنگ سینٹر میں منتقل کرکے ان کی بائیو میٹرک مکمل ہونے کے بعد چمن بارڈر پر منتقل کردیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے حاجی کیمپ میں بنائے جانے والے ہولڈنگ سینٹر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پہلے مرحلے میں پولیس نے کوئٹہ اور مختلف علاقوں میں کارروائیاں کرتے ہوئے غیر قانونی طور پر گھروں میں موجود افغان باشندوں کو گرفتار کیا ہے اور انہیں کیمپ میں منتقل کردیا گیا جن کی ڈاکومنٹیشن مکمل کی جارہی ہے کیمپ میں انہیں تمام بنیادی سہولیات مہیا کی گئی ہے دوسرے مرحلے میں پولیس کی جانب سے کئے جانے والے سروے کے مطابق گھروں کی سرولنس کی جائے گی اور لوگوں کو گرفتار کیا جائے گا۔ اس کے بعد تیسرے مرحلے میں جعلی شناختی کارڈ اور دیگر شناختی دستاویزات رکھنے والوں کے خلاف بھی کارروائی ہوگی اس کے بعد سڑکوں پر چیکنگ کے ذریعے بھی یہ عمل شروع کیا جائے گا۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ انتظامیہ کی جانب سے مختلف تھانوں اور علاقوں میں کئے گئے سروے کے مطابق 13 ہزار سے زائد غیر قانونی رہائش پذیر تارکین وطن اور افغان باشندوں کا ڈیٹا ہمارے پاس موجود ہے جس کے ذریعے یہ کارروائیاں کی جارہی ہے۔ ہولڈنگ سینٹر میں بائیو میٹرک مکمل ہونے کے بعد انہیں چمن بارڈر منتقل کردیا جائے گا تاکہ انہیں واپس ان کے وطن بھیجا سکے۔ ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اب تک 425 لوگوں کو ہولڈنگ سینٹر لایا جاچکا ہے۔ مزید لوگوں کو لانے کے لئے پولیس کارروائیاں کررہی ہے۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.