Mashriq Newspaper

پاکستان نے اچھی کرکٹ کھیلی، کیچ ڈراپ ٹیم کیلئے مہنگے ثابت ہوئے، محمد حفیظ

قومی ٹیم کے ڈائریکٹر محمد حفیظ نے سڈنی میں آسٹریلیا کے خلاف قومی ٹیم کی مسلسل 17ویں شکست کے بعد کہا ہے کہ آسٹریلیا میں بہتر کرکٹ کھیلی مگر اپنی غلطیوں کی وجہ سے ہارے، شاہین شاہ آفریدی کو ٹی ٹوئنٹی کرکٹ کی وجہ سے آرام نہیں دیا ان کی باڈی تھکاوٹ کا شکار ہے اور نہیں چاہتے کہ مزید انجریز ہوں اس لیے انہیں آرام دیا۔

یاد رہے کہ آج سڈنی میں کھیلا گیا آخری ٹیسٹ میچ میزبان ٹیم نے 8 وکٹوں سے اپنے نام کیا تھا، جبکہ پرتھ ٹیسٹ میں آسٹریلیا 360 اور میلرن ٹیسٹ میں 70 رنز سے کامیابی اپنے نام کی تھی جس کے نتیجے میں قومی ٹیم کو آسٹریلیا میں لگاتار 17ویں ٹیسٹ میچ میں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

سڈنی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ٹیسٹ سیریز میں شکست کے بعد کئی سبق سیکھے، کپتان شان مسعود نے ٹھیک وقت میں صحیح فیصلے کیے، محمد حفیظ نے عامر جمال کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے اس سیریز میں بہترین کرکٹ کھیلی، وہ موقع کی تلاش میں تھے اور انہوں نے فائدہ بھی فائدہ بھی اٹھایا، ہمیں اس پر فخر ہے۔

محمد حفیظ نے کہا کہ جن ڈومیسٹک کھلاڑیوں کو سیریز میں موقع دیا انہوں نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا، میر حمزہ، خرم شہزاد، عامر جمال سسٹم میں موجود تھے لیکن بدقسمتی سے انہیں موقع نہیں دیا گیا۔

آسٹریلیا سے مسلسل 17ویں شکست کے باوجود محمد حفیظ نے کہا کہ وہ ذاتی طور پر سمجھتے ہیں کہ دورۂ آسٹریلیا میں پاکستان ٹیم نے اچھی کرکٹ کھیلی، کچھ ایسے لمحات تھے جس سے ٹیم فوری فائدہ نہ اٹھا سکی۔

انہوں نے کہا کہ میلبرن میں کیچز ڈراپ مہنگا ثابت ہوا، اگر یہ کیچز ڈراپ نہ ہوتے تو کہانی مختلف ہوتی، محمد حفیظ نے قومی ٹیم کی ایک اور غلطی کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ جب دوسری اننگز میں عامر جمال نے 6 وکٹیں لیں وہ موقع پاکستان نے ضائع کردیا، اس وقت قومی ٹیم کو آسٹریلیا کو چیلنج کرسکتی تھی۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.