Mashriq Newspaper

حماس کی قید میں اسرائیلی خاتون فوجی کی بمباری میں ہلاکت کی تصدیق

اسرائیلی فوج نے تصدیق کی ہے کہ 19 سالہ خاتون فوجی اہلکار کارپورل نوا مارسیانو حماس کی قید میں ہلاک ہوگئیں۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیل کی کارپورل نوا مارسیانو کو حماس  7 اکتوبر کو یرغمال بناکر اسرائیل سے غزہ لائے تھے اور ان کا تاحال معلوم نہ ہوسکا تھا۔

حماس کی القسام بریگیڈ نے اس حوالے سے بتایا تھا کہ یرغمالی فوجی خاتون اسرائیل کے ایک فضائی حملے میں 9 نومبر کو ماری گئیں تاہم ترجمان القسام ابو عبیدہ نے یہ نہیں بتایا کہ وہ کس مقام ماری گئیں۔

ابو عبیدہ کے اس بیان کی آزادامہ ذرائع سے تصدیق نہیں ہوسکی تاہم اب اسرائیلی فوج نے کارپورل نوا مارسیانو کی ہلاکت کی تصدیق کردی اور ان کے اہل خانہ کو بھی آگاہ کردیا۔

یاد رہے کہ 7 اکتوبر کو حماس نے اسرائیل پر حملہ کرکے 240 افراد کو یرغمال بنالیا تھا اور غزہ لے آئے تھے جن میں سے 4 کو رہا کیا جا چکا ہے جب کہ ایک کو اسرائیل نے بازیاب کرانے کا بھی دعویٰ کیا ہے۔

7 اکتوبر سے اسرائیل کی بمباری میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 11 ہزار 300 سے زائد ہوگئی جب کہ 25 ہزار کے قریب زخمی ہیں۔ شہید اور زخمی ہونے والوں میں نصف تعداد خواتین اور بچوں کی ہے۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.