Mashriq Newspaper

تندور ایسوسی ایشن اور ڈپٹی کمشنر کوئٹہ کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے

کوئٹہ (سٹی رپورٹر) بلوچستان تندو ایسویسی ایشن کے چیئر مین محمد نعیم خلجی نے کہا ہے کہ ڈپٹی کمشنر کوئٹہ سے کامیاب مذاکرات کے بعد 165گرام کی روٹی 25روپے جبکہ 330گرام 50روپے کی روٹی فروخت کرنے کے لئے 15روز کے لئے نرخ نامہ دیا گیا جس کے بعد تجزیاتی کمیٹی اپنا فیصلہ کر کے نیا ریٹ مقر ر کرنے کے لئے انتظامیہ کو تجاویز دے گئی اور نیا ریٹ مقرر کیا جائے گا ڈپٹی کمشنر کوئٹہ لیفٹیننٹ (ر) سعد بن اسد سے مذاکرات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے محمد نعیم خلجی نے کہا کہ ہم نے مذاکرات کی کامیابی کے بعد 12 روز سے جاری تندوروں کی ہڑتال ختم کر دی ہے کیونکہ ڈپٹی کمشنر کوئٹہ سے مذاکرات کے متعد د راﺅنڈ ہوئے جس کے بعد انہوں نے عارضی طور پر 15یوم کے لئے ہمیں 165گرام کی روٹی 25روپے جبکہ 330گرام کی روٹی 50روپے میں فروخت کرنے کی اجازت دی ہے اور ان 15دنوں میں تجزیاتی کمیٹی اپنا تجزیہ کر کے جو بھی ریٹ مقر ر کرنے کے لئے انتظامیہ کو تجویز دی گئی اور انتظامیہ جو ریٹ مقر ر کرئے گی اور وہ ریٹ ہمیں قبول ہو گا ہم نے نگران صوبائی وزیر داخلہ ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ اور دیگر حکام سے ملاقاتوں کے باوجود ڈپٹی کمشنر بار بار مذاکرات کے کوئی بات نہیں مان رہے تھے اور ہمیں عوام کی مشکلات کا بھی اندازہ تھا اس دوران عوام کو جو تکلیف ہوئی وہ انتظامیہ کی وجہ سے ہوئی ہم تو بار بار مذاکرات کے لئے راضی تھے لیکن ڈپٹی کمشنر تیار نہیں ہو رہے تھے آج وہ مذاکرات کے ذریعے معاملات کو بہتر بنانے کے لئے تیا ر ہوئے اور ہم نے ہڑتا ل ختم کر دیا اور انہوں نے 165گرام وزن کی روٹی کے لئے 25روپے جبکہ 335گرام کی روٹی کے لئے 50روپے کا ریٹ دیا ہے۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.